165

پاکپتن: بدقسمتی سے تین سالوں میں حکومت نے کوئی ایسا کام نہیں کیا جس میں ریاست مدینہ کی جھلک نظر آتی ہو، ڈاکٹر ساجد لطیف مانیکا

پاکپتن (نصراللہ جوئیہ سے) بدقسمتی سے تین سالوں میں حکومت نے کوئی ایسا کام نہیں کیا جس میں ریاست مدینہ کی جھلک نظر آتی ہو ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر ساجد لطیف مانیکا نے جماعت اسلامی کے زیر اہتمام مہنگائی، بے روزگاری وکرپشن کے خلاف نکالی جانے والی ریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا.

امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق کی ہدایت پر جماعت اسلامی ضلع پاکپتن کے زیر اہتمام مہنگائی، بیروزگاری، بد امنی اور سودی نظام کے خلاف لاری اڈا سے نگینہ چوک تک احتجاجی ریلی نکالی گئی. ریلی کی قیادت ضلعی امیر رانا انیس الرحمن نے کی

ریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے عبدالرزاق خلیل ضلعی جنرل سیکرٹری، امیر زون 191 ڈاکٹر ساجد لطیف مانیکا نے کہا کہ موجودہ حکومت بھی سابقہ حکومتوں کا ہی تسلسل ہے. انہوں نے ریاست مدینہ کا نعرہ لگایا، ہم نے تین سال انتطار کیا کہ اگر یہ سچ میں پاکستان کو ریاست مدینہ بنانا چاہتے ہیں تو ہم ان کے ساتھ ہیں. لیکن بدقسمتی سے تین سالوں میں انہوں نے کوئی ایسا کام نہیں کیا جس میں ریاست مدینہ کی جھلک نظر آتی ہو. خان صاحب نے ایک کروڑ نوکریوں، پچاس لاکھ گھروں، اور کرپشن ختم کرنے کے جو وعدے کئے ان میں سے کوئی بھی وفا نہیں ہو سکا.

مقررین نے کہا کہ جماعت اسلامی کی قیادت اس ملک کو بحرانوں سے نکالنے کی صلاحیت رکھتی ہے، کیونکہ ان پر کرپشن کا کوئی داغ نہیں اور ماضی اس کا گواہ ہے کہ ہمیں جہاں جہاں بھی موقع ملا ہم نے ڈلیور کرکے دکھایا ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں