42

پاکپتن: مذہب اسلام نے خواتین کو سب سے پہلے بنیادی حقوق دیے ہیں خوا تین کو ایمپاور کرنا وقت کا تقاضا ہے، مسز پیر احمد شاہ کھگہ.

پاکپتن (وقار فرید جگنو سے) مذہب اسلام نے خواتین کو سب سے پہلے بنیادی حقوق دیے ہیں خوا تین کو ایمپاور کرنا وقت کا تقاضا ہے،ایک اچھی ماں ایک اچھے خاندان کی کلید ہے ایک اچھی ماں ہی ایک اچھا خاندان بنا سکتی ہے بچوں اوربچیوں کی تعلیم و تربیت پر توجہ مرکوز کریں تاکہ ایک اچھا اور صحت مند معاشرہ تشکیل پاسکے، معاشرہ تب سنورے گا جب خواتین کی زندگی میں بہتری آئے گی، پڑھی لکھی ماں صحت مند اور باوقار معاشرے کی بنیاد ہے،اگر خواتین اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے ملازمت کا راستہ اختیار کریں تو اکثر ان کیلئے ماحول موافق نہیں ہوتا کیونکہ ہمارے معاشرتی رویے خواتین کی حوصلہ شکنی کرتے ہیں ان خیالات کا اظہار ایم پی اے / صوبائی پا رلیمانی سیکر ٹری انرجی مسزپیر احمد شاہ کھگہ نے بہبود آبادی کے زیراہتمام عالمی یوم خواتین کے سلسلہ میں منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا.

سیمینار میں ڈی او بہبود آبادی نوید شوکت، تحصیل آفسیر بہبود آبادی حافظ احمد رضا، ڈپٹی ڈی او بہبود آبادی احمد صہیب، ڈیمو گرافر نصراللہ حبیب، الطاف حسین، انچارج فیملی ہیلتھ کلینک ڈاکٹر رضیہ روف، انچارجز فلاحی مراکز فیاض ناہید، ارشاد احمد، محمد عامر، محمد طارق سمیت محکمہ بہبود کے مختلف مراکز کے انچارجز اور دیگر ملازمین نے شرکت کی.

ڈی او بہبود آبادی نوید شوکت نے کہا کہ خواتین کو بااختیار بنانا حکومت کی ترجیح ہے بلکہ ان کی معاشرتی اہمیت کو بھی اجاگر کرنا ہے، خواتین کو اپنی حثیت، مقام اور خود کو منوانا چاہیے، معاشی، معاشرتی اور اقتصادی ترقی اور گھریلو خوشحالی کا خواب عورت کی ذندگی میں بہتر ی لائے بغیر ناممکن ہے، خواتین اپنے حقوق کی پامالی بارے معاشرے کے دباؤ کا شکار ہیں تحصیل آفسیر بہبود آبادی حافظ احمد رضا نے کہا کہ بہت اور باوقار معاشرے کا قیام خواتین کو دور جدید کے تقاضوں سے ہم آہنگ تعلیم اور آگاہی دینے سے ممکن ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں