69

ذرائع ابلاغ کی اہمیت اور اس کی اقسام …(عبدالقیوم نعیمی)

تحریر: عبدالقیوم نعیمی

ذرائع ابلاغ کی اہمیت زندگی کے ہر شعبےمیں مسلمہ ہے۔ کسی بھی ملک کا ذریعہ ابلاغ اس ملک کا آئینہ ہوتا ہے جس کے ذریعے اسکی سوسائٹی منعکس ہو کر ہمارے سامنے آتی ہیں بلکہ یہ سوسائٹی کو بنانے میں اہم کردار ادا کرتا ہے، ابلاغ کے ذریعے ہم دیگر اقوام سے متعارف ہوتے ہیں، ان کی تہذیب اور روایت کے بارے میں جانتے ہیں، ابلاغ عامہ کے ذریعے سے جب کوئی بُرائی پھیلتی ہے تو اس کے ذریعے بچنے کی تدابیر بھی ابلاغ عامہ کے ذریعے کی جاتی ہیں۔

ابلاغ عامہ کے ذریعے قوم کی تعمیر و تشکیل کے نظریات فروغ دئیے جا سکتے ہیں۔ ابلاغ عامہ کی ضرورت، انسان کو معاشرے کی تنطیم کے ساتھ ساتھ محسوس ہوئی لیکن اس دور میں جب کتاب، اخبار، ریڈیو فلم، ٹیلی ویژن جیسے ذرائع موجود نہ تھے، تقریر اور ڈرامہ کو زیادہ اہمیت حاصل تھی۔

ذرائع ابلاغ کی اقسام:

ذرائع ابلاغ کی بنیادی طور پر دواقسام ہیں۔

1. مطبوعہ ذرائع ابلاغ:

تحریر کا آغاز انسان کے آغاز کے ساتھ ہی شروع ہوا ہے اور تحریر و تصویر کو اپنے خیالات کے اظہار اور دوسروں کو ترغیب دینے کے لیے زمانہ قدیم سے استعمال کیا جا رہا ہے۔ اخبارات، میگزین، رسائل اور کتب وغیرہ اس کی مثالیں ہیں اور ابلاغ کا بہترین ذریعہ بھی۔

2. غیر مطبوعہ یا الیکٹرونک میڈیا:

یعنی ایسا ابلاغ جو برقی تاروں کے ذریعےپیغام ایک جگہ سے دوسری جگہ پہنچائے۔ الیکٹرونک میڈیاکا سفر ٹیلی گرام، ٹائپ رائٹر، ریڈیو، ٹیلی فون، ٹیلیویژن اور کمپیوٹر پر ختم نہیں ہوا بلکہ موبائل، انٹرنیٹ اور I.Pad کی صورت میں جا ری و ساری ہے اور یہ ابلاغ کے تیز ترین اور تیز رفتار ذرائع ابلاغ ہیں جو لمحوں کے اندر خبر کو پوری دنیا میں پھیلاتے ہیں جس کی وجہ سے پوری دنیا گلوبل ویلج میں بدل چکی ہے۔ الیکٹرونک میڈیا نے لوگوں کی عمومی معلومات میں غیر معمولی اضافہ کیا ہے ان کی زندگیوں میں انقلاب برپا کر دیا ہے اور اس کے اندر انٹرنیٹ سب سے زیادہ اہم ایجاد ہے۔

انٹرنیٹ:

انٹرنیٹ ذرائع ابلاغ کی ایک ترقی یافتہ شکل ہے اور ایک انتہائی تیز رفتار سروس بھی، آج کے دور کی اہم ٹیکنالوجی کمپیوٹر کا ایک عالمگیر نیٹ ورک ہے جو مختلف انداز میں بے شمار معلومات مہیا کرتا ہے۔ میل کے ذریعے دنیا کے ایک کونے سے دوسرے کونے تک خبریں اور تصاویر چند سیکنڈز میں پہنچ جاتی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں