46

پاکپتن: ملک میں کوئی قانون ہوتا تو شہباز شریف نہیں بلکہ عاصم سلیم باجوہ گرفتار ہوتے، پیر خالد قطب چشتی.

پاکپتن (ییر علی مجتبی سے) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما یونین کونسل قبولہ کے سابق چیئرمین پیر خالد قطب چشتی نے کہا ہے کہ میاں محمد نواز شریف سمیت مسلم لیگی قائدین کے خلاف قائم جھوٹے مقدمات کی شدید مذمت کرتے ہیں.

You can only have direct referrals after 15 days of being a user and having at least 100 clicks credited

مسلم لیگ (ن) میں سے(ش) کبھی نہیں نکلے گی چاہے آپ شہباز شریف کو گرفتا ر کرلیں یا مریم نواز کو گرفتار کرلیں اب یہ تحریک نہیں رکے گی ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ ملک میں کوئی قانون ہوتا تو شہباز شریف نہیں بلکہ عاصم سلیم باجوہ گرفتار ہوتے شہباز شریف کی گرفتاری اپنے بھائی کے ساتھ کھڑے ہونے کی وجہ سے ہوئی اگر عاصم سلیم باجوہ کا معاملہ عدالت نہیں دیکھتی تو ہم اس معاملے کو اے پی سی اور رہبر کمیٹی کے سامنے رکھیں گے پیر خالد قطب چشتی نے کہا کہ یہ بات اب یہاں نہیں رکے گی اگر اس ملک میں کوئی قانون ہوتا تو شہباز شریف نہیں بلکہ عاصم سلیم باجوہ گرفتار ہوتے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں