182

لاہور: منشیات کیس میں ضمانت ہونے پرجیل سے رہائی کے بعد مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ کی پہلے پریس کانفرنس

لاہور (اسد الیاس سے) گذشتہ روز منشیات کیس میں ضمانت ہونے کے بعد جیل سے رہائی کے بعد مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ کی پہلی پریس کانفرنس.

پریس کانفرنس کی مکمل ویڈیو دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں.

یاد رہے کہ مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ کو چھ ماہ قبل فیصل آباد سے لاہور پارٹی اجلاس میں شمولیت کرنے کے لیے آتے ہوئے راستے میں ٹول پلازہ پر گرفتار کرلیا گیا تھا ان پر الزام عائد کیا گیا کہ ان سے اکیس کلو گرام ہیروئی برآمد ہوئی ہے، ان کو اے این ایف تھانہ میں منتقل کرنے کے بعد دو روز بعد ان پر پندرہ کلو ہیروئین برآمدگی کی ایف آر درج کرلی گئی تھی. بعد ازاں وفاقی وزیر شہریار آفریدی نے نے اے این ایف کے سربراہ کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے دعوی کیا تھا کہ ان کی تین ہفتے تک ریکی کی گئی اور پھر گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے اور ریکی، گرفتاری اور برآمدگی کے حوالے تمام ثبوت اور مکمل فوٹیج بھی دستیاب ہے. تاہم رانا ثناء اللہ نے اس تمام تر دعووں کی تردیدی کردی تھی. بعد ازاں عدالت میں متعدد پیشیوں اور واٹس ایپ میسیج کے ذریعے جج کی تبدیلی کے بعد بالآخر لاہور ہائی کورٹ نے نامکمل شواہد، فوٹیج کی عدم دستیابی اور تضادات کو مدنظر رکھتے ہوئے کیس کے سیاسی ہونے کے خدشہ کے پیش نظر ان کو دس، دس لاکھ کے دو مچلکوں کے عوض ضمانت پر رہاکرنے کا حکم دیا. اگلے روز مچلکے جمع کروائے جانے کے بعد ان کو اڈیالہ جیل سے رہا کردیا گیا. رہائی کے بعد انہوں نے بھر پور پریس کانفرنس کی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں