251

پاکپتن: زیابطیس دنیا میں سب سے زیادہ پھیلنے والا مرض ہے جسے خاموش قاتل کہا جاتا ہے، حکیم عبدالمجید شامی.

پاکپتن (خرم شہزاد سے) زیابطیس دنیا میں سب سے زیادہ پھیلنے والا مرض ہے جسے خاموش قاتل کہا جاتا ہے ان خیالات کا اظہار پاکستان طبی کانفرنس کے ضلعی صدر حکیم عبدالمجید شامی نے گذشتہ روز زیابطیس کے عالمی دن کے موقع پر پاکپتن ہومیوپیتھک میڈیکل ایسوسی ایشن وطبی کانفرنس کے زیر انتظام منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا.

انہوں نے کہا کہ دنیا بھر میں زیابطیس تیزی سے پھیل رہا ہے، پاکستان میں بھی اس کی شرح خطر ناک حد تک زیادہ ہے، اگر یہی صورتحال رہی تو آئندہ چند سالوں میں پاکستان کی آبادی میں سے 25 فیصد لوگ اس مرض میں مبتلا ہو جائیں گے، زیابطیس انسان کو دیمک کی طرح کھا جاتا ہے اور انسان کو خبر ہی نہیں ہونے دیتا، پاکپتن ہومیوپیتھک میڈیکل ایسوسی ایشن کے صدر ہومیوپیتھک ڈاکٹر میاں غلام مرتضی نے اپنے خطاب میں کہا کہ شوگر یا زیابطیس کی بروقت تشخیص یا علاج نہ کیا جائے تو یہ مہلک ہو سکتا ہے انہوں نے کہا کہ ہومیو پیتھک اور یونانی طریقہ علاج میں زیابطیس کا بہتر علاج موجود ہے اگر متاثرہ مریض بروقت تشخیص کے بعد ابتداء ہی میں ان طریقہ ہائے علاج سے استفادہ کرے تو بہتر نتائج حاصل ہوسکتے ہیں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں