227

پاکپتن: عرس بابا فریدؒ پر پولیس کا زائرین پر بدترین لاٹھی چارج، پہلے دو روز میں لاٹھی چارج و دھکم پیل سے 290افراد زخمی.

پاکپتن (وقار فرید جگنو سے) عرس بابا فریدؒ پر پولیس کا زائرین پر بدترین لاٹھی چارج، پہلے دو روز میں لاٹھی چارج و دھکم پیل سے 290افراد زخمی، پولیس نے بہشتی گزرنے کیلئے آنے والے ہزاروں زائرین کو پلے گراؤنڈ میں بند کردیا.

ویڈیو کلپ دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریںیڈیو کلپ دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں

تفصیلات کے مطابق برصغیر پاک و ہند کے عظیم روحانی بزرگ و پنجابی زبان کے پہلے صوفی شاعر حضرت بابا فرید الدین مسعود گنج شکرؒ کے 777ویں سالانہ عرس مبارک کی تقریبات پاکپتن میں جاری ہیں، تقریبات میں شرکت کیلئے لاکھوں زائرین پاکپتن پہنچ رہے ہیں، بہشتی دروازہ کے پہلے دو روز میں پولیس کی جانب سے زائرین پر بدترین لاٹھی چارج کیا گیا، بہشتی دروازہ کے دوسرے روز زائرین کو پلے گراؤنڈ میں داخل کرکے خارجی دروازہ بند کردیا جو مسلسل دو سے تین گھنٹے تک بند رہا، پلے گراؤنڈ کا دروازہ بند ہونے کی وجہ سے ہزاروں کی تعداد میں زائرین پلے گراؤنڈ میں پھنس گئے، جنہیں بہشتی دروازہ گزرنے کی سعادت حاصل کئے بغیر واپس لوٹنا پڑا، پولیس کی جانب سے زائرین پر لاٹھی چارج بھی کیا گیا.

ریسکیو1122 کی جانب سے جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق بہشتی دروازہ کے پہلے دو روز میں لاٹھی چارج و دھکم پیل سے 290 افراد متاثر ہوئے جن میں سے 279 زائرین کو موقع پر طبی امداد دی گئی اور 11 زخمی ہسپتال منتقل کئے گئے، واضح رہے کہ ریسکیو 1122 کی جانب سے ملنے والے اعداد شمار کے علاوہ بہت سے زخمیوں کو مختلف سماجی تنظیموں کی جانب سے لگائے میڈیکل کیمپوں پر بھی طبی امداد دی گئی زائرین اور شہریوں نے اعلیٰ حکام سے بدترین لاٹھی چارج کیخلاف نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں