219

ساہیوال: صحافیوں کی جانب سے کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے ریلی.

ساہیوال (خصوصی رپورٹ) وزیر اعظم پاکستان کی اپیل پر صحافیوں کی جانب سے کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے ریلی نکالی گئی۔ساہیوال پریس کلب رجسٹرڈ کے سامنے سول سوسائٹی کے ہزاروں افراد بھی ریلی میں شریک ہوگئے۔

ریلی کے شرکاء کے کشمیر بنے گا پاکستان اور انڈین جارحیت کے خلاف نعرے بازی، شرکاء نے پینا فلیکس، پاکستان اور کشمیر کے پرچم اٹھا رکھے تھے۔ صدرساہیوال ڈویژنل پریس کلب پیرسید طمطراق محاسن شاہی،صدرپرنٹ میڈیاایسوسی ایشن راناوحید،کنوینئرریڈیوایسوسی ایشن ملک دلاورسلطان ڈھکو کی جانب سے کشمیری بھائیوں کے ساتھ یکجہتی کے لیے ایک ریلی کا انعقاد کیا گیا۔ شرکاء نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی تصاویر، کشمیر بنے کا پاکستان اور پاکستانی اور کشمیری پرچم اٹھا رکھے تھے۔ بارہ بجے سے پہلے تمام صحافی پریس کلب کے باہراکھٹے ہوگئے.

ٹھیک 12 بجے پاکستان اور بارہ بج کر تین منٹ آزاد کشمیر کا ترانہ سنایا گیا۔ ریلی پریس کلب سے روانہ ہو کرریلوے روڈپررواں دواں ہوئی تو عوام کی ایک کثیر تعداد بھی صحافیوں کی ریلی میں شامل ہو گئی۔ شرکاء نے بھارتی جارحیت کے خلاف زبردست نعرے بازی کی جبکہ پاکستان زندہ باد، کشمیر بنے کا پاکستان اور نعرہ تکبیر بلند کئے۔ریلی کے اختتام پرپیرسید طمطراق محاسن شاہی،راناوحید،ملک دلاورسلطان ڈھکونے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے اقوام عالم سے اپیل کی کہ وہ بے لگام بھارتی فورسسز کو فوری طور پر مقبوضہ کشمیر میں مظالم بند کرنے، عالمی قوانین کی پابندی کرنے اور کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حق رائے دہی پر مجبور کرے۔ انہوں نے کہا کہ آج پاکستانیوں نے سخت گرمی میں اپنا پسینہ بہا کر بھارت کو یہ پیغام دیا ہے کہ یہ قوم اگر پسینہ بہا سکتی ہے تو خون بہانے سے بھی گریز نہیں کرے گی اور کشمیری بھائیوں کی بھارت سے آزادی کے لیے ہر راست قدم اٹھائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں