198

محراب پور: ہماری لڑائی میں بیچ بچاو کیوں کروایا، دوران ڈیوٹی نوجوان کا استاد پر حملہ.

محراب پور(مک مشتاق احمد سے) محراب پور کے مین سندھی پرائمری اسکول کے استاد خالدہریاہ پر دوران ڈیوٹی نوجوان نے حملہ کرکے لاتوں گھونسوں کی برسات کردی شورشرابہ پر ساتھی اساتذہ نے کلاس میں پہنچ استاد کو نوجوان سے بچایا اورحملہ آور کو پکڑکر پولیس کے حوالے کیا سندھی پرائمری اسکول کی ہیڈمسٹریس نوشین کنول میمن نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ کلاس میں دو بچوں کی لڑائی پر استاد خالد احمدنے صلح کرؤائی تھی اس کے باوجود لڑائی میں پہل کرنے والے بچے کے ورثاء نے دوران ڈیوٹی استاد پر حملہ کیا جو کہ افسوسناک عمل ہے استاد پر حملہ کیخلاف شیخ ارشد قاسمی، استاد غلام نبی مغل، استاد حفیظ سومرو، استاد خالد ہریاہ کی قیادت میں استاد برادری نے محراب پور تھانے پر احتجاج کیا اور مطالبہ کیا کہ حملہ کرنے والے نوجوان فدانوناری کیخلاف ڈیوٹی میں مداخلت اور دہشت گردی کا کیس داخل کیاجائے پرائمری ٹیچرس ایسوسی ایشن کے رہنماؤں اصغر آرائیں و خواجہ غلام اکبر نے اظہار یکجہتی کے طور پر مظاہرے میں شرکت کی اور کہا کہ کیس داخل نہ کیا گیا تو احتجاج کا دائرہ بڑھایا جائیگامظاہرین کا کہنا تھا کہ دوران ڈیوٹی استاد پر حملہ کسی ایک استاد پر حملہ نہیں بلکہ تعلیم پر حملہ ہے اس لئے تعلیم دشمنوں کو کیفرکردار تک پہنچانا چاہئے دوسری جانب ایس ایچ او محراب پورراحم حسین واسوانو نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ ملزم کو گرفتار کرکے ابتدائی رپورٹ داخل کی گئی ہے تفتیش کے بعدمزید کارروائی کی جائے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں