199

اسلام آباد: عدالتی وقت کے بعد نواز شریف کی رہائی میں ملوث سپریم کورٹ ملازمین کی سزائیں کالعدم

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) سابق وزیراعظم نواز شریف کی عدالتی وقت ختم ہونے کے بعد رہائی میں ملوث سپریم کورٹ ملازمین کی سزائیں کالعدم قرار دے دی گئیں۔

سپریم کورٹ نے عدالتی وقت ختم ہونے کے باوجود نواز شریف کی ضمانت کے فیصلے کی ترسیل اور کوٹ لکھپت جیل سے فوری رہائی میں ملوث ملازمین کی سزائیں کالعدم قرار دے دیں۔ چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے ملازمین کی اپیلیں منظور کرکے برطرف ملازم محمد ریاض کو عہدے پر بحال کردیا جب کہ علی اور شہزاد کی اینکریمنٹ روکنے کی سزا بھی کالعدم قرار دے دی۔

واضع رہے کہ رجسڑار آفس نے اس معاملے پر محمد ریاض کو برطرف کردیا تھا جبکہ دو ملازمین علی اور شہزاد کے تین سال کے انکریمنٹ (تنخواہ میں اضافہ) روکنے کی سزا سنائی تھی۔ عدالتی اوقات کار شام ساڑھے 3 بجے تک ہیں، جب کہ سپریم کورٹ کا ضمانت کا فیصلہ رات 9 بجے لاہور بھجوایا گیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں