177

لاہور: حکومت میڈیا پالیسی واضح کرے، صحافتی تنظیمیں

لاہور (اسد الیاس سے) صحافتی تنظیموں نے حکومت سے میڈیا پالیسی واضح کرنے کا مطالبہ کردیا۔ آئے روز کی میڈیا پالیسی اور مختلف اداروں کی طرف سے جاری ہونے والے بوگس احکامات کی بدولت صحافیوں کو اپنے فرائض کی انجام دہی میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ حکومتی وزراء اور مشیر آئے روز میڈیا کے بارے میں مختلف بیانات دیتے رہتے ہیں جس سے صحافی برادری میں شدید اضطراب پایا جاتا ہے اور انہیں صحافتی امور کی انجام دہی میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ جرنلسٹس رائٹس کمیشن آف پاکستان کے چیئرمین صابر بخاری، قلم دوست کے صدر ایثار رانا، پاکستان فیڈریشن آف کالمسٹ کے صدر ملک سلمان نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ میڈیا پالیسی واضح کرے تاکہ صحافی برادری میں پایا جاننے والا کنفیوژن دور ہو سکے، جب تک میڈیا میں کنفیوژن رہے گا تب تک حکومتی امور بھی کنفیوژن کا شکار رہیں گے۔ حکومت میڈیا کورٹس سمیت کوئی پالیسی بنانا چاہتی ہے تو اس کے اغراض و مقاصد صحافتی تنظیموں اور میڈیا مالکان کیساتھ شیئر کیے جائیں اگر فریقین اس پر رضا مند ہوں تو اس پالیسی کو لاگو کردیا جائے۔ وزراء اور مشیران کے بیانات حکومت کی ساکھ کو متاثر جبکہ صحافی برادری میں اشتعال کاباعث بن رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صحافی برادری آزادی صحافت کیخلاف بنائی گئی کسی بھی پالیسی کو مسترد کردے گی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان وزراء اور مشیران کو پابندکریں کہ وہ آئے روز میڈیا کے حوالے سے بے پرکی نہ اڑائیں۔ حکومت مختلف اداروں کی طرف سے میڈیا کوریج روکنے کے بوگس احکامات کا بھی نوٹس لے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں