184

ساہیوال: ڈویژن کے سرکاری ہسپتالوں میں ماہانہ تقریبا 7لاکھ مریضوں کو چیک جب کہ 20 ہزار سے زائد کو داخل کیا جاتا ہے، ڈاکٹر صادق سلیم، ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز.

ساہیوال (خصوصی رپورٹ) ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ڈاکٹر صادق سلیم نے کہا ہے کہ ڈویژن کے سرکاری ہسپتالوں میں ماہانہ تقریبا 7لاکھ مریضوں کو چیک کیا جاتا ہے، جس میں سے 20ہزار سے زائد مریضوں کو مزید علاج کے لئے داخل کیا جاتا ہے، اس کے علاوہ ماہانہ ایک لاکھ سے زائد ایمرجنسی ٹریٹمنٹ بھی کی جا رہی ہے- انہوں نے یہ بات اپنے دفتر میں محکمہ صحت کی موجودہ سال کے پہلے چھ ماہ کی کارکردگی کے بارے میں بریفنگ دیتے ہوئے کہی-

انہوں نے بتایا کہ ساہیوال ڈویژن میں 3 ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرہسپتال، 4 تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال، 26دیہی مراکز صحت اور 228 بنیادی مراکز صحت دن رات عوام کو صحت کی بہتر سہولیات فراہم کرنے کے لئے کوشاں ہیں اور محدود وسائل کے باوجود ہر مریض کو تما م ادویات کی فراہمی کو بھی یقینی بنایا جا رہا ہے- انہوں نے مزید بتایا کہ سال کے پہلے 6 ماہ کے دوران ڈویژن کے ہسپتالوں اور مراکز صحت میں 40لاکھ سے زائد مریضوں کو او پی ڈی سے چیک کیا گیا جبکہ 6 لاکھ سے زائد مریض ایمرجنسی میں بھی آئے- ان مریضوں میں سے ایک لاکھ 22 ہزار مریضوں کو مزید علاج کے لئے داخل کیا گیا جبکہ اس دوران 4لاکھ 42 ہزار میڈیکل ٹیسٹ اور ایک لاکھ 17 ہزار ایکسرے بھی کئے گئے- ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ڈاکٹر صادق سلیم نے بتایا کہ سال کے پہلے 6 ماہ کے دوران 14 ہزار سے زائد آپریشنز جبکہ 37 ہزار سے زائد ڈیلیوریز بھی کی گئیں- ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ ان اعداد و شمار میں ڈی ایچ کیو ٹیچنگ ہسپتال ساہیوال اور حاجی عبدالقیوم ٹیچنگ ہسپتال شامل نہیں ہیں- انہوں نے مزید بتایا کہ پورے ڈویژن میں انستھیزیا ڈاکٹروں کی شدید کمی ہے جس سے آپریشنز کرنے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے جب کہ تمام ہسپتالوں اور مراکز صحت پر سپیشلسٹ ڈاکٹروں کی آدھی سیٹیں بھی عدم دستیابی کی وجہ سے خالی ہیں-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں