183

ساہیوال: ڈسٹرکٹ کونسل ساھیوال میں سرکاری ترقیاتی ریکارڈ غائب ھونے کا انکشاف

ساھیوال (میاں محمد وقار یعقوب سے) تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ کونسل ساھیوال میں ملازمین کی ایڈوانس حاضریاں اور سرکاری ریکارڈ کی عدم دستیابی کا انکشاف ھوا ھے۔ ڈسٹرکٹ کونسل کے متعلقہ افسر کی جانب سے لوکل گورئمنٹ کے اعلی افسران کو درخواست گزاری گئی۔ جس میں درخواست گزار نے ڈسٹرکٹ کونسل کے سیاہ باب سے پردا اُٹھاتے ھوئے بتایا کہ ڈسٹرکٹ کونسل کی آئی اینڈ ایس برانچ میں چارج لینے کے بعد آفس میں حاضری رجسٹر کے علاوہ کوئی سرکاری ریکارڈ موجود نہ پایا گیا اور جو حاضری رجسٹر موجود پایا گیا اس پر بھی سب انجینئرز و ملازمین کی ایڈوانس حاضریاں لگی ھوئی پائی گئی۔ متعلقہ افسر کا درخواست میں کہنا تھا کہ برانچ کا پیشتر ترقیاتی کاموں کا سرکاری ریکارڈ غیرقانونی طور پر سب انجینئرز کے گھروں میں موجود ھے۔ سب انجینئرز حضرات غیر قانونی طور پر گھروں سے ہی کنٹریکٹرز کمپنیوں کے بلز تیار کرتے اور متعلقہ ریکارڈ برانچ میں جمع کروائے بغیر ہی فنانس برانچ سے ڈائریکٹ بلز کلیئر کرواتے آ رھے ھے متعلقہ سب انجینئرز کو کئی بار سرکاری لیٹرز کے ذریعے سرکاری ریکارڈ ڈسٹرکٹ کونسل شفٹ کرنے کے لیے متنبہ کیا گیا لیکن کوئی ردعمل سامنے نہ آ سکا۔ درخواست گزار کا مزید کہنا تھا کہ سرکاری ریکارڈ کو غیر قانونی طور پر اپنے گھروں میں رکھنے اور گھروں سے ہی بلز کی تیاری اور ادائیگیاں کی گئی جس پر اگر شفاف انکوائری کی جائے تو کرپشن سمیت بہت کچھ سامنے آنے کا اندیشہ ھے پرانے ریکارڈ کے بغیر ہی نیا ریکارڈ بنایا جانا ایک مشکل مرحلہ ھے لیکن مجبوری کے تحت پرانے ریکارڈ کے بغیر ہی دیگر برانچوں کی معاونت سے نیا ریکارڈ سسٹم بنایا جا رہا ھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں