180

پاکپتن: حمزہ شہباز کی بھونڈے الزامات میں گرفتای نیب کی غیر جانبداری کے منہ پر طمانچہ ہے. خان امتیاز علی خان.

پاکپتن (مقبول حسین سے) حمزہ شہباز کی بھونڈے الزامات میں گرفتای نیب کی غیر جانبداری کے منہ پر طمانچہ ہے نیب قوانین کا صرف اپوزیشن پراطلاق نیب گردی کے سوا کچھ نہیں قومی رہنماؤں کے خلاف چیئرمین چمی چٹا کی جانب سے مقدمات کا انداراج صریحاََ فاشزم ہے ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ (ن) ضلع پاکپتن کے صدر خان امتیاز علی خان ایڈووکیٹ سپریم کورٹ نے پریس کلب پاکپتن کے باہر احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا احتجاجی مظاہرہ سے مسلم لیگ ن کے جنرل سیکرٹری محمد جمیل فریدی،ضلعی سینئر نائب صدر عاطل محمود منے خاں،سٹی صدر اعظم چوہدری، ایم این اے میاں احمد رضا خاں مانیکا کے نمائندے میاں ریاض احمد کلیا،ضلعی راہنما علی احمد اسد،ضلعی صدر خواتین ونگ موتیا مسعود خالدسٹی صدر نورین خان عمردراز حسین مسلم لیگ (ن) یوتھ ونگ کے سٹی صدر معظم بٹ، کونسلر سید کرم شاہ، نے خطاب کیا احتجاجی مظاہرہ میں سینکڑوں افراد نے شرکت کی مقررین نے کہا کہ چمی چٹا کے شوقین چیئرمین نیب کیجانب سے قومی رہنماؤں کے خلاف جھوٹے اور بے بنیاد ریفرنسز اپوزیشن کی آواز دبانے کاحربہ ہے نیب اگر غیر جانبدار ہوتا تو اپنے چیئرمین کے واضع بیان کے بعد حکومت میں شامل عمران نیازی،پرویز خٹک،بابر اعوان جہانگیر ترین علیمہ باجی جیسے مکروہ کرداروں کو بھی کٹہرے میں لاتا مگر انتہائی افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ نیب اور عمران نیازی گٹھ جوڑ نتیجہ میں اختلاف رائے کا حق چھینا جا رہا ہے انھوں نے کہاکہ بجٹ کے اعلان سے قبل قومی رہنماؤں کی گرفتاری زرائع ابلاغ میں جان لیوا بجٹ کو زیر بحث آنے سے روکنے کے سوا کچھ نہیں بعض نادیدہ قوتیں اپنے مذموم مقاصد کے لیے ملک میں انتشار پیدا کرنا چاہتی ہیں لیکن ایسی قوتوں پر واضع کرنا ضروری ہے کہ جمہوری نظام کی بساط لپیٹنے کی ہر سازش ناکام بنا دی جائے گی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں