211

پاکپتن: ریسکیو 1122 نے ماہ مئی میں 258ٹریفک حادثات722میڈیکل ایمرجنسیز آگ لگنے کے24واقعات ڈوبنے کے 5 لڑائی جھگڑے گولی لگنے کے 33جبکہ151دیگر ایمرجنسیزڈیل کیں. ڈاکٹر احتشام مظہر.

پاکپتن(ولی محمد شاکر سے) ریسکیو1122 نے گزشتہ ماہ کی کارکردگی رپورٹ جاری کر دی ریسکیو1122پاکپتن کو گزشتہ ماہ 15403کالز موصول ہوئیں جن میں صرف 1193ایمرجنسی کالز تھیں یہ بات ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرپاکپتن ڈاکٹر احتشام مظہرنے ریسکیو 1122 آفس میں گزشتہ ماہ کی کارکردگی کا جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کی اجلاس میں ریسکیو اینڈ سیفٹی آفیسر ریسکیو 1122عبدالقیوم نعیمی کنٹرول روم انچارج راجہ فصیح الملک و دیگر ایڈمن سٹاف موجود تھا اجلاس میں کنٹرول روم انچارج راجہ فصیح الملک نے بریفنگ میں بتایا کہ ریسکیو1122کنٹرول روم کو گزشتہ ماہ 15403کالز موصول ہوئیں جن میں سے صرف 1193ایمرجنسی کالز تھیں جس کے نتیجے میں 1260 افراد متاثر ہوئے ان میں سے107افراد کو موقع پر ہی طبی امداد دی گئی جبکہ1124 افراد کو ہسپتال منتقل کیا گیاجبکہ 29افراد موقع پر جاں بحق ہو گئے ایمرجینسیز میں 258ٹریفک حادثات722میڈیکل ایمرجنسیز آگ لگنے کے24واقعات ڈوبنے کے 5 لڑائی جھگڑے گولی لگنے کے 33جبکہ151دیگر ایمرجنسیز تھیں ان تمام ایمرجنسیز میں ریسکیو 1122 نے اپنا سٹینڈرڈ ریسپانس ٹائم07منٹ کو برقرار رکھااسکے علاوہ 440مریضوں کو بہتر طبی سہولتوں کے حصول کیلئے پیشنٹ ٹرانسفر سروس کے تحت ایک شہر سے دوسرے شہر میں منتقل کیا گیا ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرکومزیدبتایا گیاکہ کمیونٹی سیفٹی پروگرام ریسکیو 1122پاکپتن کے تحت یونین کونسلز میں کمیونٹی ایکشن فار ڈزاسٹر ریسپانس کے کورسز کروائے گئے جبکہ نجی وسرکاری اداروں میں تین روزہ بیسک لائف سپورٹ اینڈ فائر سیفٹی کے کورسسزکروائے گئے محکمہ صحت کے زیر انتظام بیسک ہیلتھ یونٹس میں فائر سیفٹی کے حوالے سے ون ڈے سیشنز کا انعقاد کیا گیا ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر نے عوام سے اپیل کی کہ شدید گرم موسم کے پیش نظر صرف ایمرجنسی کی صورت میں ہی باہر نکلیں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں