206

پاکپتن: ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی و سماجی تنظیموں کے زیر اہتمام بلڈ پریشر کے عالمی دن کے حوالے سے DHDC کانفرنس ہال میں سیمینار کا انعقاد اور آگاہی واک.

پاکپتن(بیورورپورٹ) ہائی بلڈ پریشر کی بنیادی وجوہات میں تمباکو نوشی صفائی ستھرائی کا ناقص انتظام انسانی آبادی میں گندگی کے ڈھیر ہیں سیوریج کا گھروں میں ناقص انتظام متوازن غذا کا استعمال نہ کرنا زیادہ فیٹس اور کاربوہائیدریٹس والی اشیاء کا استعمال، کولڈ ڈرنکس اور بیو ریجز کا بے تحاشہ استعمال شامل ہیں ان خیالات کا اظہار سی ای او ہیلتھ رانا امتیاز احمد نے بلڈ پریشر کے عالمی دن کے حوالہ سے ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کے زیر اہتمامDHDC ہال ڈسٹرکٹ کمپلیکس میں ڈسٹرکٹ انٹی ٹی بی ایسوسی ایشن، سوسائٹی فار ہیلتھ ایجوکیشن اینڈ انوائرمنٹل پروٹیکشن پاکپتن، محکمہ سوشل ویلفیئر بیت المال پاکپتن، انجمن فلاح مریضان پاکپتن، پاکپتن ہومیو پیتھک میڈیکل ایسوسی ایشن، پاکستان طبی کانفرنس پاکپتن کے زیر اہتمام سیمینار اور واک سے خطاب کرتے ہوئے کیا. سیمینار میں صدر انجمن فلاح مریضاں ڈاکٹر شاہد مرتضیٰ نے بطور اسٹیج سیکرٹری فرائض سرانجام دیئے اور بتایا کہ اس وقت ہمارے ملک کے 52 فیصد آبادی اس عفریت میں مبتلا ہے جن میں سے 45 فیصد لوگ جانتے ہی نہیں کہ ان کو یہ مسئلہ کیوں ہے، صرف 12 فیصد مریضوں کا مکمل علاج ممکن ہوسکتا ہے. اس لیے اس مرض سے خود کو بچا کر رکھنا ہی واحد حل ہے. جس کے لیے ہمیں تین سفید زہروں سے بالخصوص بچنا ہوگا جو کہ سفید نمک، چینی اور میدہ ہیں. ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر محمد ریاض احمد نے تقریب میں بلڈ پریشر کو کنٹرول رکھنے کی احتیاطی تدابیر کے متعلق آگاہی دیتے ہوئے کہا کہ ہمیں جتنا ہو سکے کھانے پینے کا طریقہ نیچرل رکھنا چاہئے فزیکل ایکسر سائز سے جسم کو ایکٹو رکھیں کیلوریز کو صرف کرنے کا اہتمام کریں. اس موقع پر افضل بشیر مرزا ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر، وقار فرید جگنو صدر پریس کلب و جنرل سیکرٹری انجمن فلاح مریضان، حکیم عبدالمجید شامی ضلعی صدر پاکستان طبّی کانفرنس، ہومیو ڈاکٹر میاں غلام مرتضیٰ صدر پاکپتن ہومیو پیتھک میڈیکل ایسوسی ایشن نے بھی خطاب کیا سیمینار میں خالد ظفر، ہومیو ڈاکٹر محمود ریاض جوئیہ پرنسپل پاکپتن پیرا میڈیکل کالج، ہومیو ڈاکٹر محمد علی، حکیم ماجد رضا، حکیم محمد یار بیگ، حکیم اسلم ہانس سمیت ڈاکٹرز، نرسسز ہومیو ڈاکٹرز حکماء سماجی تنظیموں کے ممبران کی کثیر تعداد نے شرکت کی حکیم لطف اللہ جنرل سیکرٹری ڈسٹرکٹ انٹی ٹی بی ایسوسی ایشن نے کہا کہ خواتین معاشرے کی بہتری خانگی معاملات تعلیم تربیت اور صحت کی بہتری میں اہم کردار ادا کر سکتی ہیں ہماری بہنوں بیٹیوں کو اپنی توانائیاں بروے کار لاتے ہوئے اپنا کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے. ہائی یا لو بلڈ پریشر کے مسئلہ کو لاپرواہی سے نہیں لینا چاہئے بلکہ ایسے لوگ جنہیں بلڈ پریشر کا مسئلہ رہتا ہے انہیں کم از کم دن میں ایک بار ضرور بلڈ پریشر چیک کرنا چاہیے. تین سفید زہروں کے استعمال سے گریز جب کہ برف اور کولڈ ڈرنکس کا مکمل بائیکاٹ کرنا ضروری ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں