217

محراب پور: آٹھ سال قبل معصوم سات سالہ بچی کو زیادتی کے بعدقتل کرنے والے ملزم پر جرم ثابت ہونے پر ماڈل کورٹ نے ملزم کو تین بار پھانسی کی سزا سنادی۔

محراب پور(محمد علی ملک) فرسٹ ایڈیشنل ماڈل کورٹ نے معصوم بچی کو زیادتی کے بعد قتل کرنے والے ملزم اصغر کمبوہ کو تین بار پھانسی دینے کی سزا سنادی عدالتی ذرائع نے تفصیلات دیتے ہوئے بتایا کہ ملزم اصغر کمبوہ نے آٹھ سال قبل یکم مارچ 2011کو محراب پور کے کمبوہ محلہ میں اسکول جانے والی نرسری کلاس کی طالبہ معصوم سات سالہ نمزہ مشتاق کو اغواء کے بعد زیادتی کا نشانہ بناکر بے دردی سے قتل کردیا تھا جس کیخلاف محراب پور تھانے پر 27/2011 مقدمہ درج تھاجسے آج عدالت نے پھانسی کی سزا سنادی دوسری جانب پھانسی کی اطلاع ملنے پرمعصوم نمرہ کے ورثاء کیجانب سے عمرفارق کلاتھ مارکیٹ سمیت دیگر جگہوں پر مٹھائیاں تقسیم کی گئیں مشتاق کمبوہ نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ ہماری جدوجہد رنگ لائی ملزم کے ورثاء کی جانب ے مختلف وقتوں میں مجھ پر بہت دباـؤ ڈالا گیا مختلف مقدمات میں پھنسایا گیا تاکہ میں اس کیس سے دستبردار ہوجاؤ مگر ڈٹا رہا اور رب کریم نے مجھے سرخرو کیا اور معصوم نمرہ کا خون رائیگاں نہیں ہونے دیاانکا کہنا تھا میں شہریوں کا بھی بہت مشکور ہو ں کے جنہوں نے میری معصوم بچی کیلئے کئی بار شہر میں ہڑتال کرکے بڑے بڑے احتجاجات کرکے مجھ سے ہمدردی کا اظہار کیا یقنیاً شہریوں کی دعاؤں کا ہی نتیجہ ہے جو ملزم اپنے آخری انجام کو پہنچ رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں