601

معدہ کی بیماریاں اور اس کا دیسی عِلاج…..(انتخاب:حکیم محمد طارق شاد)

انتخاب:حکیم محمد طارق شاد

یہ حقیقت ہے آج کل کے دور میں ناقص غذاؤں، آرام طلبی اور چٹپٹے کھانوں مثلاً زیادہ ٹھنڈی اور زیادہ گرم چیزوں کے کثرتِ استعمال، ناقص پانی، ماحول کی آلودگی، مختلف قسم کی ایسی بازاری اشیاء جو کہ صحت کے لیے مضر ہیں سگریٹ نوشی، منشیات کا استعمال، ورزش نہ کرنا، رات کو دیر سے کھانا کھانے کے بعد فوری سو جانا، مرغن غذاؤں کا استعمال، ذہنی پریشانی اور پیدل چلنے سے گھبرانے کی وجہ سے ہر دوسرا انسان کسی نہ کسی مرض میں مبتلا ہے، مثلاً گیس ٹربل، معدہ کی جلن، بدہضمی، پیچش، قبض، سینے کی جلن، نفخِ شکم، بواسیر، سستیِ جگر، گردوں کے امراض، بلڈپیشر، معدے کے زخم، پیٹ کا پھول جانا وغیرہ وغیرہ معدے کے امرض کا سبب ہیں.

ﷲ تعالٰی نے انسان کے معدے کے اندر ایسی تمام خصوصیات رکھی ہیں جن سے تمام غذائیں جو ہم کھاتے ہیں انسانی زندگی کے لیے مفید ہوں، لیکن انسان ان غذاؤں کے غلط استعمال سے اپنے نظام ہضم کو خراب کر لیتا ہے
اگر ہم کھانے پینے میں اعتدال رکھیں، متوازن اور زود ہضم غذائیں کھائیں تو معدہ تا حیات خراب نہیں ہوتا
اس لیے معالجین کا قول ہے

معدہ درست انسان تندرست

نظامِ ہضم کی درستگی ہی اپنی صحت کی علامت ہے، اگر ہم برسات کے موسم میں پانی اُبال کر استعمال کریں تو اس سے معدہ کی امراض میں کافی حد تک کمی آ سکتی ہے، کیونکہ ناقص پانی معدہ، انتڑیوں اور نظامِ ہضم کو متاثر کرتا ہے،
دوسری بات یہ ہے کہ ہمارے معالجین کو چاہیے کہ علاج کے علاوہ مریض کو ان بیماریوں سے بچاؤ سے آگاہ کریں اور خوراک و پرہیز کے متعلق زیادہ سے زیادہ معلومات فراہم کریں تاکہ مریض علاج کے ساتھ ساتھ پرہیز سے بھی تندرست ہو۔

نمبر 1 :

اگر قبض ہو تو اسبغول کا چھلکا گرم دودھ کے ساتھ رات کو ایک چمچی کھایا کریں۔

نمبر 2 :

قے متلی آئے تو چھوٹی الائچی، پودینہ، سونف، دارچینی 6، 6 گرام پانی میں اُبال کر رکھ لیں اور وقفہ وقفہ سے تھوڑا تھوڑا پانی پیتے رہیں۔

نمبر 3 :

اگر معدہ میں زخم اور ورم ہو تو اس میں ٹھنڈا دودھ تھوڑا تھوڑا وقفہ وقفہ سے دن میں کئی دفعہ استعمال کریں
اور اس میں نمک مرچ، مرغن غذائیں اور مصالحہ جات استعمال نہ کریں
اور 1/2 چمچی دیسی اجوائین دو گلاس پانی میں جوش دے کر دو دفعہ دن میں پیئں۔

نمبر 4 :

پیچش اور پاخانے آتے ہوں تو دہی اور نرم غذائیں، مثلاً چاول، کیلا، کچھڑی وغیرہ استعمال کریں، اگر پھر بھی آرام نہ آئے تو کڑاچھال کا سفوف بنا کر آدھی چمچی دن میں ایک دفعہ لسی کے ساتھ کھائیں انشاءﷲ فوری شفاء ہو گی

نمبر 5 :

اگر خوراک اثر نہ کرتی ہو، خون نہ بنتا ہو اور رنگت پیلی ہو، جسم کمزور ہو، چہرہ کیل چھائیاں داغ اور دھبوں سے بھرا ہو، جسم میں گرمی ہو، ہاتھ پاؤں جلتے ہوں، ہر وقت بے چینی سی رہتی ہو تو یہ نسخہ استعمال کریں۔

نسخہ الشفاء :

ہلیلہ 25 گرام،
بلیلہ 25 گرام،
آملہ 25 گرام،
سونف 25 گرام،
فلفل دراز 25 گرام،
خبث الحدید 25 گرام،
فلفل سیاہ 12 گرام،
مجیٹھ 12 گرام،
جو کھار 5 گرام،
کوزہ مصری 50 گرام

ترکیب تیاری :

تمام ادویہ کو صاف ستھرا کرکے پیس کر باریک سفوف بنا لیں، بعد میں دہی 2 کلو لیکر تھوڑا تھوڑا ڈالتے جائیں اور کھرل کرتے جائیں، جب تمام دہی کھرل کرتے کرتے خشک ہو جائے تو سایہ میں اچھی طرح دواء کو خشک کر لیں اور دوبارہ پیس لیں پھر ایک گرام والے کیپسول بھر کر رکھ لیں۔

مقدار خوراک :

ایک کیپسول صبح اور شام دہی یا لسی کے ساتھ روزانہ خالی پیٹ کھائیں ایک ماہ استعمال کریں۔

فوائد :

انشاءﷲ جگر کی تمام خرابیاں دُور ہو کر رنگ سُرخ ہو گا، مرجھایا ہوا چہرہ کھل جائے گا، صاف اور صالح خون پیدا ہو گا،
چہرہ پر رونق آ جائے گی اور کمزوری دُور ہو گی۔

نوٹ :

اگر بلڈ پریشر ہو تو فلفل سیاہ اور سفید زیرہ سالن میں استعمال کریں، نمک سے بلکل پرہیز کریں، پیشاب آور اشیاء استعمال کریں.
اگر بلڈ پریشر کم ہو تو انڈا، مچھلی، گوشت، پھل فروٹ استعمال کریں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں