239

پاکپتن: قتل کے ملزمان گرفتا نہ ہوسکے، تنازعہ آرمی سٹڈ فارم بائیل گنج مقتولین کے ورثاء اور انجمن مزارعین کا احتجاج.

پاکپتن(حیدر علی شہزاد سے) قتل کے ملزمان کی عدم گرفتاری اور اپنے مطالبات کے حق میں سینکڑوں افراد کا شدید احتجاج ڈی پی او آفس کا گھیراؤ، تفصیلات کے مطابق چند روز قبل نواحی گاؤں بیل گنج میں ہونے والے قتل کے ملزمان کی عدم گرفتاری اور اپنے مطالبات کے حق میں کے انجمن مزارعین پاکپتن اور اوکاڑہ کے سینکڑوں افراد نے احتجاجی ریلی نکالی اور ڈی پی آفس گھیراؤ کیا اور دھرنا دیامظاہرین اور انجمن مزارعین کے صدر چوہدری شبیر نے کہا کہ سٹڈ فارم بیل گنج کے ملازمین خلیل، جمیل، مظہرعباس، آفتاب، طاہر ، امام شاہ، شعبان، ریاض وغیرہ نے اندھا دھند فائرنگ کر کے ہمارے ایک ساتھی کو موت کے گھاٹ اتار دیاقتل کے ملزمان کو گرفتار کیا جائے اور ہمیں انصاف اور تحفظ دیا جائے انہوں نے کہا کہ ہم 1864سے اس بنجر زمین کوجانوروں کے زریعے آباد کئے ہوئے ہیں ہمارا اس پر خون پسینہ خرچ ہوا ہے ، اب ہمیں منصوبہ بندی کے تحت صرف 100روپے وصول کر کے بے دخل کیا جا رہا ہے،ہمارا مطالبہ ہے کہ ہمارے یونٹ بنائیں جائیں اورہم 3ہزار روپے دینے کو تیار ہیں، اگر ہمارے مطالبات تسلیم نہ ہوئے تو احتجاج کا دائرہ وسیع کر دیا جائیگا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں