257

اسلام آباد: صارفین پر بجلی بم گرادیا گیا، فی یونٹ ایک روپیہ 80 پیسے مہنگا، صارفین کو ساڑھے تیرہ ارب روپے اضافی ادا کرنے ہوں گے.

اسلام آباد (حکیم طارق شاد سے) بجلی کی قیمت میں ایک روپے اسی پیسے فی یونٹ کا اضافہ کردیا گیا‘ اضافے سے صارفین پر تیرہ ارب پچاس کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا۔ تفصیلات کے مطابق بجلی کی قیمت میں ایک روپے اسی پیسے فی یونٹ کا اضافہ کردیا گیا ہے۔ بجلی کی قیمتوں میں اضافہ جنوری کی فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں کیا گیا۔ اس حوالے سے نیپرا نے باضابطہ نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا ہے۔ بجلی کی قیمتوں میں اضافے سے صارفین پر تیرہ ارب پچاس کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا۔ نیپرا کی جانب سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق لائف لائن‘ زرعی صارفین اور کے الیکٹرک بجلی کی قیمتوں میں اضافے سے مستثنیٰ قرار دیئے گئے ہیں۔ نیپرا حکام کے مطابق جنوری میں کوئلے‘ ایل این جی سے چلنے والے پلانٹس پوری صلاحیت پر نہیں چلائے گئے یہ پلانٹس چلائے جاتے تو چھ ارب ستر کروڑ روپے کی بجلی بچ سکتی تھی۔ کوئلے‘ آر ایل این جی کے پلانٹس چلائے جاتے تو فی یونٹ اکیانوے پیسے کی بچت کی جاسکتی تھی۔ سی پی پی اے نے بجلی کی قیمت میں ایک روپیہ ترانوے پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے کی درخواست کی تھی۔ نیپرا حکام کے مطابق جنوری میں مہنگے فیول‘ فرنس آئل سے سب سے زیادہ بجلی صارفین کو فراہم کی گئی۔ ایک ماہ میں فرنس آئل کے ذریعے صارفین کو چوبیس ارب روپے کی مہنگی بجلی فراہم کی گئی جبکہ جنوری میں فرنس آئل سے 22.2 فیصد بجلی صارفین کو فراہم کی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں