230

ساہیوال: کشمیر پربھارت کا غاصبانہ قبضہ عالمی برادری کی امن پسندی اور انسانی حقوق کی علمداری کے منہ پر ایک بد نما داغ ہے. پروفیسر بلال اشرف.

ساہیوال(خصوصی رپورٹ) پاکستان مطلوم کشمیریوں کو ان کے حق خود ارایت کی جدو جہد میں اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا تاکہ جنوبی ایشیا کا ایک دیرینہ مسئلہ جلد حل ہو اور لاکھوں کشمیریوں کو آزادی نصیب ہو۔ یہ بات گورنمنٹ پوسٹ گریجوایٹ کالج ساہیوال کے زیر اہتمام طلباء و طالبات کے مابین ہونیوالے کشمیر ڈے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہی۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کا غاصبانہ قبضہ عالمی برادری کی امن پسندی اور انسانی حقوق کی علمداری کے منہ پر ایک بد نما داغ ہے جسے دور کرنا اقوام متحدہ سمیت تمام عالمی اداروں کی اخلاقی ذمہ داری ہے۔ سیمینار کی صدارت انچارج پرنسپل ظہورحسین نے کی، مہمان خصوصی ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز پروفیسر بلال اشرف باجوہ اورانچارج شعبہ تاریخ پروفیسر عمران جعفرکمیانہ تھے جبکہ کالج کے طلباء و طالبات اور اساتذہ کی بڑی تعداد بھی شریک ہوئی، سیمینار میں کشمیریوں کی جدو جہد آزادی کے مختلف پہلوؤں کو اجاگر کیا گیا اور بھارت پر زور دیا گیا کہ وہ کشمیریوں کواپنی قسمت کا فیصلہ کرنے کا حق دے جس کا وعدہ انہوں نے کشمیری عوام اورپوری دنیا سے کیا تھا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں