306

اپنی ناراضکی کو یوں جتایا ہم نے (غزل…آمنہ حبیب..حیدر آباد)

شاعرہ. آمنہ حبیب…حیدر آباد.

اپنی ناراضگی کو یوں جتایا ہم نے
اس کی ہر بات پہ سر جھکایاہم نے

خشک کرکے آنکھوں سے آنسو
دل کو بس اپنے صنم رلایا ہم نے

مدت بعد سجدے میں گر کر۔۔۔۔
آج پھرخدا کو خوب ستایا ہم نے

بھیگ گئی آسماں کی آنکھیں بھی
جو تھوڑا سا درداپنا سنایا ہم نے

عشق کی انتہا بھلااور کیا ہوگی
درد بنا کےآدھےسر میں بسایا ہم نے

تھام کر ہاتھوں میں ہاتھ اس کا
بڑی بے دردی سے رقیب کو جلایا ہم نے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں