221

نوشھروفیروز:(ویڈیورپورٹ) 2007 میں شروع ہونے والا چلڈرن پارک ابھی تک مکمل نہ ہوسکا. ضلعی چیئر مین عبدالستار عباسی نے نوٹس لے کر کام کا آغاز کروادیا.

ویڈیو رپورٹ دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں

نوشھروفیروز(ملک مشتاق احمد سے) 2007 میں چلڈرین پارک نوشھروفیروز کا تعمیراتی کام شروع تو کیا گیا۔ لیکن ناکس پلاننگ اور عدم دیکھ بھال کی وجہ سے نوشھروفیروز کی اس بڑی پارک کا براحال ہوچکاتھا. شھریوں کے لئے واحد تفریحی مقام کا یہ حال دیکھ کر ضلع کونسل چیئرمین نوشھروفیروز عبدالستار عباسی نے یہ پارک ضلع کونسل کی تحویل میں لے کر اس پارک کو فیملیز کی تفریح کے لئے سال 2019 کے پہلے دن کے تحفہ کے طور پر پاکستان کی بھترین فیملی پارک بنانے کا اعلان کردیا۔ جس کی ذمہ داری نامور آرٹسٹ ڈُپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر سید علی احمد شاھ کے سپرد کردی۔ جس کا کام 2019 کے پہلے دن شروع ہوچکاہے. فیملی پارک کے گارڈ اور چوکیدار بھی تعینات کئے جا چکے ہیں۔ اس سلسلے میں آج ضلع کونسل چیئرمیں نے سید علی احمد شاھ کے ساتھ پارک کا دورہ کیا پارک کی اندرونی اور بیرونی حالت کا جائزہ لیا اور کہا کہ جتنے بھی وسائل درکار ہوں ان کو فراھم کیا جائیں گے تاکہ جلد سے جلد یہ پارک فیملیز کے لئے اوپن کی جاسکے۔
فیملی پارک کی مئنیجمنٹ کمیٹی کے سربراہ سید علی احمد شاھ نے اپنی کمیٹی میں مختلف طبقہ فکر کے 7 ایسے ممبران کو بھی شامل کیا ہے جو والنٹری طور پر پبلک پارک کی تکمیل میں اپنا کردار اداکریں گے جن میں سجاد احمد میمن۔ شاھد احمد خانزادہ، نعمان چنہ، شبیر احمد لوھاچ، مظفر علی عباسی، خلیفہ عمیر میمن شامل ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں