220

پاکپتن: 2018 میں پنجاب ایمرجنسی سروس(ریسکیو1122) نے 17444 ایمرجنسی متاثرین کو ریسکیو کیا. ڈاکٹر احتشام مظہر

پاکپتن(بیورورپورٹ)ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرپنجاب ایمرجنسی سروس(ریسکیو 1122)ڈاکٹرحتشام مظہر نے کہا ہے کہ سال 2018 میں پنجاب ایمرجنسی سروس نے 17444 ایمرجنسی متاثرین کو ریسکیو کیا پاکپتن میں 2019 کو ائیر آف دی سیفٹی کے طور پر منایا جائے گا تاکہ شہریوں میں احساس تحفظ پیدا ہوان خیالات کا اظہار انہوں نے آفس میں منعقدہ ایک میٹنگ میں 2018کی سالانہ کارکردگی کا جائزہ لینے کے دوران کیامیٹنگ میں ریسکیو اینڈسیفٹی آفیسر عبدالقیوم نعیمی، کنٹرول روم انچارج راجہ فصیح الملک کے علاوہ دیگر ایڈمن سٹاف نے شرکت کی اجلاس میں ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر کو بریف کیا گیا کہ ریسکیو 1122پاکپتن نے2018میں ضلع بھر میں اوسط ریسپانس ٹائم سات منٹ کو برقرار رکھتے ہوئے12649ریسکیو آپریشنز میں 17444متاثرین کو ریسکیو کیاکنٹرول روم ڈیٹا کے مطابق 2018میں ریسکیو 1122پاکپتن نے3539روڈ ٹریفک حادثات 6542 میڈیکل ایمرجینسیز 151آگ لگنے کے واقعات 379جرائم کے واقعات، ڈوبنے کے21 عمارت گرنے کے 3 واقعات سلنڈرپھٹنے کا ایک 2013مختلف واقعات پر پیشہ ورانہ مہارت سے ریسکیو سروس فراہم کی انکو بتایا گیاکہ 2010سے اب تک ریسکیو1122مجموعی طور پر107414مریضوں کو76695 ایمرجنسی کالز پر ریسکیو کر چکا ہے میٹنگ میں ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر کو کمیونٹی سیفٹی پروگرام کی رپورٹ بھی دی گئی جس کے تحت ضلع بھر کی 54یونین کونسلز میں کمیونٹی ایمرجنسی ریسپانس ٹیمز تشکیل دی گئیں اسکے علاوہ 3183لوگوں کو فرسٹ ایڈکی ٹریننگ دی گئی انہوں نے کہاکہ ڈسٹرکٹ ایمرجنسی بورڈ کو ڈپٹی کمشنر پاکپتن کی قیادت میں مزید فعال کیا جائے گا تاکہ حادثات کی شرح کو کم سے کم کیا جا سکے .

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں