220

ساہیوال: ایل پی جی گیس کمپنیوں نے 22 کروڑ عوام کو کنگال کردیا،اوگرا اور حکومت گیس مافیا کے سامنے بے بس.

ساہیوال(خصوصی رپورٹ) ہیولٹ، پیرائیڈ، ایان، ہزارہ ایل پی جی گیس کمپنیوں نے 22 کروڑ عوام کو کنگال کردیا، اواگرا (گیس ریگولیٹری اتھارٹی) اور حکومت گیس مافیا کے سامنے بے بس، عوام سراپا احتجاج. تفصیلات کے مطابق ہیولٹ، پیرائیڈ، ایان، ہزارہ ایل پی جی کمپنیاں گیس امپورٹ کرتی ہیں، سردیوں کے موسم میں قدرتی گیس کی پاکستان میں قلت ہوجاتی ہے تو گیس مافیا ان کمپنیز کے مالکان عمران (ساکن لاہور) الیاس خان بلوچ جاوید ایل پی جی گیس درآمد کرکے پاکستان میں لگے ایل پی جی گیس پلانٹس کو بلیک مارکیٹنگ کرکے مہنگے داموں فروخت کرتے ہیں اور ایل پی جی پلانٹس والی ڈسٹری بیوٹرز کو گیس فراہم کرتے ہیں ایسے میں عوام کا کچومر نکل جاتا ہے۔ پیرائیڈ کمپنی کا مالک ایف بی آر کا تین سے چار ارب ٹیکس بھی ہڑپ کرچکا ہے، یاد رہے کہ پاکستان میں گیس کی پیداوار %30 ہے جبکہ ہم %70 گیس درآمد کرتے ہیں اور یہ گیس ایل پی جی بحری جہازوں کے ذریعے پاکستان لائی جاتی ہے. ہر ضلع کی انتظامیہ ایل پی جی گیس پلانٹس کے مالکان اور ڈسٹری بیوٹرز آپس میں الجھ رہے ہیں. جبکہ زائد منافع خوری کمپنیوں کے مالکان کررہے ہیں. اواگرا(گیس ریگولیٹری اتھارٹی) خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے. پاکستان کی عوام کا وزیراعظم عمران خان سے مطالبہ ہے کہ ان کمپنیز اور گیس مافیا کے خلاف ایکشن لیا جائے اور عوام کو سستی گیس کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں