297

پاکپتن: شہید حکیم محمد سعید ایک ہمہ گیر شخصیت کے مالک تھے.ڈاکٹر عبدالکریم پرنسپل گورنمنٹ سپیشل ایجوکشین سکول.

پاکپتن(حیدر علی شہزاد سے) شہید حکیم محمد سعید ایک ہمہ گیر شخصیت کے مالک تھے، فلاح و احترام انسان ان کی زندگی کا مقصد تھا ان خیالات کا اظہار گورنمنٹ سیکنڈری اسکول اسپیشل ایجوکیشن پرنسپل ڈاکٹر عبدالکریم نے شہید پاکستان حکیم محمد سعید کی 99ویں سالگرہ وقومی دن کے موقع پرتقریب سے خطاب کرتے ہوئی کیا۔ حکیم لطف اللہ سیکرٹری جنرل پاکستان سوشل ایسوسی ایشن نے کہا کہ شہید پاکستان حکیم محمد سعید نے اپنی زندگی کو فروغ علم کے لیے وقف کر رکھا تھا۔نونہالوں کی ذہنی تربیت کے حوالے سے ہمدرد نونہال اسمبلی قائم کی، رواں صدی کی سب سے بڑی شخصیت تھے۔ شہید حکیم محمد سعید اکثر فرماتے کہ ”میرے بچو متحد ہو جاؤ” نونہالوں کی تعلیم ان کی زندگی کا مقصد تھا وہ روزے بہت پابندی سے رکھتے تھے۔ جب گورنر سندھ بنے تو سرکاری گاڑیاں استعمال کرنے کے بجائے اپنی ذاتی گاڑی میں آنا جانا پسند کرتے تھے۔ آپ کی رہائش گورنر ہاؤس کے بجائے اپنے ہی گھر پر تھی۔ ریاض ارشد نیازی ضلعی صدر پاکستان تحریک انصاف نے اپنے خطا ب میں کہا کہ اخلاق، محبت، خلوص، علم، ایثار، انسان دوستی، فروغ طب و حکمت، وقار اطبا، تعمیر وطن اور سعی و عمل کی ہمیشہ زندہ رہنے والی تاریخ کا دوسرا نام شہید حکیم محمد سعید ہے.ڈاکٹر شاہد مرتضیٰ چشتی جنرل سیکرٹری انجمن فلاح مریضاں نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہاشہید پاکستان نے تعلیم اور اخلاقی نظام کے لیے سر پر کفن باندھ کر اٹھ کھڑے ہوئے آج بھی ان کا مشن جاری ہے، شہید پاکستان نے اپنی محنت سے کئی جہان آباد کیے،حکیم صاحب روزانہ اٹھارہ گھنٹے کام کرنے کے عادی تھے، انھوں نے اپنی کاوشوں سے عالمی ادارہ صحت(WHO) سے طب یونانی کو سائنس تسلیم کروایا اور طب یونانی، ہومیو پیتھی اور ایلوپیتھی کو ایک صفحے پر لانے میں کامیاب ہوئے۔اس موقع پر طارق انجم چوہدری ڈپٹی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر، سابق پرنسپل گورنمنٹ فریدیہ کالج پروفیسر رشید احمد، صدر پریس کلب وقار فریدجگنو، علی حسنین مسعود، چیئر مین سکول مینجمنٹ کمیٹی محمد جمیل فریدی، حکیم ندیم احمد، حیدر علی شہزاد نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر سالگرہ کا کیک سکول کے بچوں نے مہمانوں کے ہمراہ کاٹا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں