540

پاکپتن: دہشت کی علامت ابراہم ملکانہ اپنے بھائی افراہیم یوسف بھٹی ایڈووکیٹ کے کلرک کے ہمراہ ضلع کچہری کے وکلاء چیمبر میں مخالفین کی فائرنگ سے ہلاک.

پاکپتن(حیدر علی شہزاد سے) کچہری میں پیشی کے دوران ملزمان کی وکیل کے چیمبر میں اندھا دھند فائرنگ، قتل سمیت سنگین مقدمات میں عبوری ضمانت پر پیشی کیلیے آنیوالے دو بھائیوں سمیت تین افراد جاں بحق، ایک شخص شدید زخمی، وکلاء کا تین روزہ ہڑتال اور سوگ منانے کا اعلان۔ بتایا گیا ہے کہ کچہری میں قتل سمیت سنگین مقدمات میں عبوری ضمانت لینے والے ابراہیم ملکانہ اور افراہیم ملکانہ پیشی کیلیے آئے تھے کہ اسی دوران مسلح ملزمان بار میں گھسے اور شوکت وٹو ایڈووکیٹ کے چیمبر میں اندھا دھند فائرنگ شروع کر دی۔ملزمان کی فائرنگ سے ابراہیم ملکانہ اسکا بھائی افراہیم ملکانہ اور یوسف بھٹی نامی وکیل کا کلرک بھی موقع پر جاں بحق ہو گئے۔ملزمان کی فائرنگ سے ایک شخص شدید زخمی ہوا جس کو ریسکیو نے ہسپتال منتقل کر دیا۔ملزمان نے کچہری میں دو مقامات پر فائرنگ کی جس پر کچہری میں موجود وکلاء اور شہریوں نے بھاگ کر جانیں بچائیں۔کچہری میں شدید خوف و ہراس پھیل گیا۔ملزمان اندھا دھند فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو گئے۔پولیس ذرائع کے مطابق ابراہیم ملکانہ اور افراہیم ملکانہ دونوں بھائی ہیں اور انہوں نے قتل سمیت سنگین مقدمات میں عبوری ضمانت لے رکھی تھی جس کی پیشی کیلیے آج کچہری میں آئے تھے۔ملزمان کی فائرنگ سے کچہری میں شدید بھگدڑ مچ گئی۔واقعہ کے ڈسٹرکٹ بار پاکپتن میں فضا ء سوگوار ہے، ڈسٹرکٹ بار پاکپتن کے صدر راؤ محمد اکرم نے کہا کہ وکلا ء اس واقعہ غم سینڈھال ہیں،بار میں تین روزہ سوگ اور ہڑتال کی جائیگی۔
اس خبر کا فالواپ جاننے کے لے یہان کلک کرین

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

پاکپتن: دہشت کی علامت ابراہم ملکانہ اپنے بھائی افراہیم یوسف بھٹی ایڈووکیٹ کے کلرک کے ہمراہ ضلع کچہری کے وکلاء چیمبر میں مخالفین کی فائرنگ سے ہلاک.” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں