230

ساہیوال: تفتیشی افسرن کی کارکردگی مانیٹرکرنے کا جدید آٹومیٹڈ کمپیوٹرائزڈ طریقہ کار وضع کیا جارہا ہے۔کیپٹن (ر)محمدعلی ضیاء،ڈی پی او.

ساہیوال(خصوصی رپورٹ )تفتیشی افسرن کی کارکردگی کی مانیٹرنگ کا جدید آٹومیٹڈ کمپیوٹرائزڈ طریقہ کار وضع کیا جارہا ہے۔اچھی کاکردگی کا مظاہرہ کرنے والے پولیس افسران و ملازمان کوانعام اورخراب کارکردگی پر سخت مواخذہ کیا جائے گا۔آئی ٹی لیب کومزید اپ گریڈ کیا جارہا ہے جس سے جرائم پیشہ عناصرکے حوالہ سے مربوط معلومات کا حصول ممکن ہو گا جس سے جرائم پر قابو پانے میں کافی مدد ملے گی۔ان خیالات کا اظہار ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ساہیوال کیپٹن (ر)محمدعلی ضیاء نے اپنے آفس میں سالانہ کاکردگی کے حوالے سے ہونے والی کرائم میٹنگ کے دوران کیا۔ کرائم میٹنگ میں ایس پی انوسٹی گیشن میڈم شاہدہ نورین جملہ ایس ڈی پی اوزضلع ہذا ،ڈی ایس پی ہیڈ کوارٹرز،ڈی ایس پی ٹریفک،ڈی ایس پی آرگنائز کرائم اورتما م ایس ایچ اوزنے شرکت کی جس میں امن و امان کے قیام کے حوالہ سے ان کی کارکردگی کا مفصل جائزہ لیا گیا۔ انہوں نے کہا اجتماعی پرفارمنس کو بہتر بنانے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہعادی ریکارڈ یافتہ اور اشتہاری مجرمان کی گرفتاری کے لئے کریک ڈاؤن میں تیزی لائی جائے۔کمرشل مارکیٹس ،بنکوں،پارکنگ ایریازو دیگراہم مقامات پرسی سی ٹی وی کیمرہ جات کی تنصیب یقینی بنائیں۔سکول کے بچوں کو پک اینڈ ڈراپ کرنے والی اوور لوڈ گاڑیوں کے خلاف سخت ایکشن لیں اوراسلحہ کی نمائش ،ہوائی فائرنگ،وال چاکنگ،الاؤڈسپیکر کا استعمال،پتنگ بازی اور آتش بازی کی صورت میں بلاتفریق کاروائی کریں۔ایس ایچ اوز تھانہ کی سطح پر عوام کی ہر ممکن دار رسی کریں اور انکی بات تسلی سے سنیں ان کو ریلیف فراہم کریں۔نیشنل ایکشن پلان اور سرچ آپریشنز میں دیگر قانون فافذ کر نے والے اداروں کے ساتھ موثر کوآرڈنیشن کے ذریعے منظم جرائم پیشہ عناصر کے خلاف کریک ڈاؤن میں تیزی لائی جائے۔ایس ایچ اوز تھانہ کی سطح پرموبائل گشت کے نظام کوموثر بنائیں۔ پینڈ نگ چالان اور د رخواستیں بروقت نمٹائی جائیں۔مقدمات کو جلد از جلدمیرٹ پر یکسو کرکے عوام کو ہرممکن ریلیف فراہم کریں۔ آخرمیں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے پولیس آفسران کو نقدانعام اورسرٹیفکیٹ دیے گئے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں