256

ساہیوال. معاشرے میں رواداری او ربرداشت کے فروغ میں فنون لطیفہ کا اہم حصہ ہے. ڈائریکٹر جنرل پی ایچ اے خالد منظور

ساہیوال(خصوصی رپورٹ) ڈائریکٹر جنرل پی ایچ اے خالد منظور نے کہا ہے کہ بچیوں کو آرٹ کی مختلف تکنیک سکھا کر انہیں ہنر مند بنایا جا سکتا ہے جس سے آرٹ کے فروغ کے ساتھ ساتھ خود روز گار کے مواقع بھی پیدا ہونگے ۔معاشرے میں رواداری او ربرداشت کے فروغ میں فنون لطیفہ کا اہم حصہ ہے جس کے لئے آرٹس کونسلز کا کردار قابل ستائش ہے ۔انہوں نے یہ بات ساہیوال آرٹس کونسل کے زیر اہتمام کشیدہ کاری اور آرٹ ورک کی 3روزہ ورکشاپ کے شرکاء میں انعامات تقسیم کرتے ہوئے کہی ۔اس موقع پر ڈائریکٹر آرٹس کونسل سید ریاض ہمدانی اور روبن آرٹ لاہور کے ایم ڈی اختر محمود بھی موجود تھے ۔انہوں نے بچیوں کے کام کے معیار کو سراہا اور کہا کہ چھپے ہوئے ٹیلنٹ کو سامنے لا کر نوجوان نسل کو معاشرے کا کا ر آمد شہری بنایا جا سکتا ہے ۔انہوں نے زور دیا کہ ایسے کاموں کی تربیت دی جائے جس کی مارکیٹ ویلیو بھی ہو تا کہ خود روز گار سے آمدن حاصل کی جاسکے۔ورکشاپ میں گلاس ایچنگ ،سٹاکنگ نیٹ فلاور،خشک پتوں پر سجاوٹ،کیلی گرافی ،فوم ڈوری ورک،کرسٹل دانا ورک،کوالنگ پیپر ورک اور سنڈ بلاسٹنگ کی تربیت دی گئی ۔گلاس ایچنگ میں جویریہ بشیر نے پہلی اور سدرہ شکور ے دوسری ،بوٹینیکل میں حنا گلزار نے پہلی اور عتیقہ جبیں نے دوسری ،خشک پتوں پر کشیدہ کاری میں عظمی صابر نے پہلی اور حافظہ اقصی تبسم نے دوسری ،سٹاکنگ نیٹ ورک میں تہمینہ صابر نے پہلی اور فضیلہ نے دوسری ،کویلنگ ورک میں رمشہ کنول نے پہلی اور زاہدہ نے دوسری اور فوم ڈوری ورک میں کشف جیلانی نے پہلی اور حفصہ نے دوسری پوزیشن حاصل کی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں