222

روڈ استعمال کرنے سے پہلے احتیاطی اقدامات کئے جائیں۔ عبدالرشید ستھو

نوشہرو فیروز (ملک مشتاق احمد سے) سیمینار کا مقصد روڈ پر ہونے والے حادثات کو روکنا ہے ان خیالات کا اظہار ایڈمن آفیسر موٹروے پولیس ابڑو عبدالرشید ستھو نے سییمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تفصیلات کے مطابق کنڈیارو موٹروے پولیس کی طرف سے ڈی ایس پی اسداللہ ابڑو اور ایڈمن آفیسر عبدالرشید سھتو نے آئی جی اے ڈی خواجہ ایڈیشنل آئی جی شاہد حیات خان ڈی آئی جی محمد سلیم اور سیکٹر کمانڈر سجاد حسین بھٹی کی خاص ہدایات پر گورنمنٹ گرلز ڈگری کالج محرابپور میں ایک روڈ سیفٹی سیمینار کا انعقاد کیا. سیمینار میں گرلز کالج کی پرنسپل میڈم اللہ بچائی بوزدار, اساتذہ اور طلبہ نے بڑی تعداد میں شرکت کی. اس موقع پر موٹروے پولیس کے ایڈمن آفیسر عبدالرشید سھتو نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ روڈ استعمال کرنے سے پہلے احتیاطی اقدامات کئے جائیں مثلاً اگر ہم موٹر سائیکل پر سوار ہیں تو ہیلمٹ پہنیں پیچھے بیٹھنے کی صورت میں اپنا دوپٹہ یا چادر ٹائروں سے دور کریں اساتذہ و طلباء کا فرض ہے کہ گھر میں والدین و بھائیوں کو کہیں کے قانون پر عمل کریں روڈ پر چلتے وقت احتیاطی تدابیر اختیار کریں اس کے علاوہ افسران نے مزید کہا کہ روڈ پر سفر کرنے کے لیے نکلیں تو گاڑی کے ٹائروں کو چیک کیا جائے گاڑی کی لائٹس آئل پانی کو چیک کریں ساتھ ساتھ ہمارے پاس ڈرائیونگ لائسنس کا بھی ہونا لازمی ہے اس کے علاوہ ہمیں ڈرائیونگ کے اصولوں کے مطابق گاڑی روڈ پر چلنے کی کوشش کریں جس سے حادثات کی روک تھام میں مدد ملے گی. دوران ڈرائیونگ موبائل فون کا استعمال اوور سپیڈ غلط اوور ٹیک کرنے سے گریز کریں سیٹ بیلٹ کا استعمال کریں موٹر سائیکل سوار ہیلمٹ کا استعمال لازمی کریں سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے مزید موٹروے پولیس کے افسران نے بتایا کہ زیادہ تر حادثات موٹر سائیکل کے ہوتے ہیں اس کی بڑی وجہ کمسن بچے موٹر سائیکل چلاتے ہیں بچوں کو کسی بھی صورت ڈرائیونگ کرنے نہ دی جائے موٹروے پولیس کے افسران چوبیس گھنٹے روڈ پر موجود ہوتے ہیں ڈرائیوروں کو دوران ڈرائیونگ اگر کسی مدد کی ضرورت پڑے تو موٹروے پولیس کی ہیلپ لائن 130 پر کال کریں ہمارے افسران فی الفور مدد کے لئے پہنچ جائیں گے. آخر میں سیمینار میں شرکت کرنے والی استذہ اور طلباء نے مختلف سوالات کئے روڈ پر سفر کرنے کے متعلق.
آخر میں گورنمنٹ گرلس ڈگری کالج کے اساتذہ اور طلباء نے کنڈیارو موٹروے پولیس کی اس کاوش کو بڑا سراہا.(رپورٹ: ملک مشتاق احمد)

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں