276

“نشہ کی لت نوجوان نسل کی تباہی کا سبب” کے موضوع پر گورنمنٹ ہائی سکول کالونی ایریا پاکپتن میں سیمینار

پاکپتن (مستنصر کامران سے) گذشتہ روز گورنمنٹ ہائی سکول اربن ایریا میں “نشہ کی لت نوجوان نسل کی تباہی کاسبب” کے موضوع پر سیمینار کا انعقاد انجمن فلاح مریضاں وڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام منعقد کیا گیا. سیمینار میں سکول کے طلباء اور اساتذہ نے بھر شرکت کی جنرل سیکرٹری انجمن فلاح مریضاں ڈاکٹر شاہد مرتضیٰ چشتی نے کہا کہ اساتذہ اور طلباء ہمارے ملک کے آئندہ کے رخ کا تعین کرنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں اساتذہ ہماری آنے والی نسل کو تعلیم یافتہ بناتے ہیں جب کہ طلبا ہمارا آنے والا کل ہیں. آج ہم آپ کو جو معلومات اور علم دے رہے ہیں اس کا فائدہ تب ہی ہوسکتا ہے کہ جب ہم اپنی عملی زندگی میں اس کو اپنائیں . ہم میں سے کون ایسا ہے کہ تمباکو نوشی اور نشہ کے نقصانات سے آگاہ نہیں ہے اگر ہم پھر بھی اس کو استعمال کریں یا اس لت میں مبتلا کسی عزیز کو نہ بچا سکیں تو پھر ہمیں سوچنا ہوگا کہ ہم کس طرح کے انسان ہیں. حکیم لطف اللہ جنرل سیکرٹری ڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن نے کہا کہ کسی بھی نوجوان کے نشہ کی لت میں مبتلا ہونے کا ذمہ دار پورا معاشرہ ہے. اس وقت ملک بھر کے 76 لاکھ سے زائد افراد نشہ کی لت میں مبتلاہیں جن میں سے بیس فیصد خواتین ہیں آج کل سکولوں اور کالجز کے طلباء وطالبات بھی اس لت میں مبتلا ہورہے ہیں تو پھر ہم اپنی قوم کے آنے والے کل کو بہتر کرنے کی امید کس سے رکھیں. آپ جو سفیر علم ودانش ہیں آپ نے اگر کوشش کی تو ہم اس برائی سے بچ سکتے ہیں ورنہ کوئی اور راستہ نہیں. سیمینار سے سینیئر ہیڈ ماسٹر محمد شعبان رضا نے بھی خطاب کیا اور تمباکو نوشی کے نقصانات پر سیر حاصل بحث کی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں