230

پولیو ویکسین میں بندر کے جراثیم ہوتے ہیں……..!

(نیٹ نیوز)پولیو ویکسین میں بندر کے جراثیم ہوتے ہیں۔ مسلم ممالک میں بچوں کو پلائی جانے والی پولیو ویکسین ایک ایسی ویکسین ہے جو کہ در حقیقت پولیو اور کینسر کا سبب بن رہی ہے۔ اس کا اعتراف خود امریکی سائنسدان کر چکے ہیں۔ یہ ویکسین اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے ڈبلیو ایچ او کی نگرانی میں مسلم ممالک میں زبردستی بچوں کو پلائی جارہی ہے۔ ایک ویڈیو میں اس کی حقیقت بیان کی گئی ہے۔ مسلمان بچوں میں ایک ممکنہ بیماری کیلئے جس کا ہونا نہ ہونا غیر یقینی ہے اس کیلئے یہود ونصاریٰ اتنا پریشان ہیں جب کہ یقینی طور پر ہمارے ممالک میں ایڈز کے مریض، دل کے مریض، بلڈ پریشر، شوگر، ٹی بی، کینسر کے مریض لاکھوں کی تعداد میں ہیں ان کیلئے اقوام متحدہ کے ادارے حرکت میں کیوں نہیں آتے ؟ان مریضوں کیلئے اقوام متحدہ مفت ادویات کیوں فراہم نہیں کرتا ؟ایسے مریض اگر دوائی نہ لیں تو پولیس زبردستی گھر آکر دوائی کیوں نہیں پلاتی؟ امریکہ اور برطانیہ میں یہ ویکسین کیوں نہیں پلائی جاتی؟ قرآن کریم کا فیصلہ ہے کہ یہود و نصاری تمہارے ہر گز خیر خواہ نہیں ہو سکتے۔ اب سوچنے کی بات ہے کہ یہ ویکسین ایک سازش ہے اس سے مسلمانوں کو آگاہ کرنا ہماری ذمہ داری ہے۔

ویڈیو دیکھنے کے لیے یہاں کلک کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں