335

نشہ کی عفریت کے خاتمہ کے لیے ہمارے طالب علم بہت مثبت کردار ادا کرسکتے ہیں.اختر علی خان

پاکپتن(نمائندہ خصوصی)کسی بھی نوجوان کے نشہ کی لت میں مبتلا ہونے کا ذمہ دار پورامعاشرہ ہے ان خیالات کا اظہار حکیم لطف اللہ جنرل سیکرٹری ڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن و پاکستان سوشل ایسوسی ایشن نے گورنمنٹ ہائی سکول 37/SP پاکپتن میں ’’ نشہ کی لت نوجوان نسل کی تباہی کاسبب‘‘ کے موضوع پر منعقدہ سیمینارمیں خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیمینار کا اہتمام ڈسٹرکٹ اینٹی ٹی بی ایسوسی ایشن اور انجمن فلاح مریضاں نے منشیات کے خلاف آگاہی مہم کے حوالہ سے کیا۔ ڈاکٹر شاہد مرتضیٰ چشتی جنرل سیکرٹری انجمن فلاح مریضاں نے اپنے خطاب میں کہا کہ اس وقت ملک بھر کے 76لاکھ سے زائد افراد نشہ کی لت میں مبتلا ہیں جن میں سے 20فیصد تعداد خواتین کی ہے اور یہ صرف سرکاری اعدادوشمار ہیں جبکہ اصل تعداد اس سے کہیں زیادہ ہے۔سینئر ہیڈ ماسٹرممتاز ماہر تعلیم اختر علی خان نے اپنے خطاب میں اس بات پر زور دیا کہ ہمارے طالب علم اس ضمن میں بہت مثبت کردار ادا کرسکتے ہیں انہیں خود اپنے آپ کو اس لت سے محفوظ رکھنے کا مصمم ارادہ کرنا ہوگا اور تعلیمی ادارے واساتذہ کرام کو بھی ان کی درست تربیت اور راہمنائی کرنا ہوگی۔محمد رؤف بھٹی نے کہا کہ نہ صرف منشیات بلکہ دیگر نشے جن میں انٹرنیٹ، سوشل میڈیا اور بے راہ روی کی روک تھام اور سدباب کرنا بھی ضروری ہے ۔ سیمینار میں سکول کے اساتذہ کرام اور ہائی کلاسز کے طلباء نے شرکت کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں