202

ایک تنومند درخت چار سے زائد لوگوں کو آکسیجن مہیا کرتا ہے.مفتی زاہد اسدی

پاکپتن( وقار فرید جگنو سے)اتحاد بین المسلمین کے صدر اسدیہ ویلفیئر فاؤنڈیشن کے صدر مفتی زاہد اسدی نے کہا ہے کہ ایک تنومند درخت چار سے زائد لوگوں کو آکسیجن مہیا کرتا ہے سموگ آلودگی کی ایک نئی قسم ہے جو سر دموسم کے آغاز سے ہی مختلف بیماریاں پھیلاتی ہے ، اس سے پیڑ پودوں کے پتوں کے مسام بند ہو جاتے ہیں جس کے باعث کا ربن ڈائی آکسائیڈ میں اضافہ اور آکسیجن کے اخراج میں کمی واقع ہو جاتی ہے ، جس سے جانداروں کیلئے سانس لینا مشکل ہو جاتا ہے درخت اللہ تعالی کی طرف سے نعمت اور قدرت کا نمول تحفہ ہیں، درخت لگانا سنت رسول ہے ، درخت ماحول کو صاف ستھرا رکھنے میں بنیادی کر دار ادا کرتے ہیں. درختوں کا فقدان ماحولیاتی آلودگی کے نقصان کا باعث بنتا ہے ، گلوبل وارمنگ سے نمٹنے کیلئے زیادہ رقبے پر جنگلات کی کاشت کی جائے جانداروں کی بقاء اور انہیں بہتر صاف شفاف ماحول مہیا کرنے کیلئے درخت لگانا از حد ضروری ہے ہر شہری پودا لگائے اور اسکی مکمل طریقے سے آبیاری کر ے ، محکمہ جنگلات کے حکام اور شہری اپنے طور پر جنگلات کی کٹائی کو روکنے میں اپنا قومی فریضہ احسن طریقے سے ادا کریں جنگلات قدرتی آفات کو کنٹرول کرنے کے ساتھ زمین کا زیو ر ہیں محکمہ جنگلات کے حکام لگائے گئے درختوں کی نہ صرف آبیاری کر یں بلکہ ان کی حفاطت کیلئے بھی جامع اقدامات کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں